.

قطر کا بحران عرب سربراہ کانفرنس کے ایجنڈے میں شامل نہیں: الجبیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے وزیر خارجہ عادل الجبیر نے کہا ہے کہ الریاض کی میزبانی میں ہونے والی عرب سربراہ کانفرنس کے ایجنڈے میں قطر اور چار عرب ملکوں کے درمیان جاری بحران کا معاملہ زیربحث نہیں آئے گا۔

خبر رساں ادارے’اے ایف پی‘ سے بات کرتے ہوئے سعودی وزیر خارجہ نے کہا کہ قطر کا معاملہ خلیج تعاون کونسل کا اندرونی مسئلہ ہے اور اسے عرب لیگ کی سربراہ کانفرنس میں نہیں اٹھایا جائے گا۔

الریاض میں ہونے والی عرب سربراہ کانفرنس میں قطر شرکت کرے گا تاہم سنہ 2011ء کے بعد سے شام کی رکنیت معطل ہونے کے باعث دمشق کسی عرب سربراہ کانفرنس میں شریک نہیں ہو سکا۔

سعودی عرب، متحدہ عرب امارات، بحرین اور مصر نے پانچ جون 2017ء کو یہ کہہ کر قطر سے سفارتی اور اقتصادی تعلقات ختم کرلیے تھے کہ دوحہ دہشت گردوں کی پشت پناہی کے ساتھ ایران کی قربت اختیار کر رہا ہے۔

سعودی پریس ایجنسی’ایس پی اے‘ کے مطابق جمعرات کو عرب لیگ کے اجلاس سے قبل قطر کا بائیکاٹ کرنے والے چاروں عرب ممالک کے وزراء خارجہ کا اہم مشاورتی اجلاس بھی الریاض میں ہوا۔