.

مصر : ڈاکٹر مرسی ، علامہ القرضاوی اور ابو تریکہ مزید پانچ سال کے لیے بلیک لسٹ قرار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کی ایک عدالت نے سابق صدر محمد مرسی ، قطر میں مقیم عالم دین یوسف القرضاوی اور فٹ بال کے ریٹائرڈ کھلاڑی محمد ابو تریکہ سمیت کالعدم دینی وسیاسی جماعت الاخوان المسلمون کی بعض سرکردہ شخصیات کو مزید پانچ سال کے لیے بلیک لسٹ قرار دینے کا فیصلہ کیا ہے۔

مصر کے سرکاری اخبار الوقائع المصریہ میں شائع شدہ ایک رپورٹ کے مطابق قاہرہ کی فوجداری عدالت نے 12 جنوری 2017ء سے بلیک لسٹ قرار دیے گئے ان تمام افراد کے اثاثے منجمد کرنے کا بھی فیصلہ کیا ہے۔

عدالت نے ان کے خلاف ایک نئے مقدمے کی تحقیقات تک انھیں دوبارہ بلیک لسٹ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔مذکورہ تینوں شخصیات کے علاوہ اس ممنوعہ فہرست میں کاروباری شخصیت صفوان ثابت ،سابق صدر کے مشیر باکینام الشرقاوی ، الاخوان المسلمون کے مرشد عام محمد بدیع ،اس جماعت کے ایک اعلیٰ عہدہ دار خیرت الشاطر ،ان کے بچے اور بعض دوسری شخصیات کے نام شامل ہیں ۔

مصری حکام کی تحقیقات کے مطابق ان شخصیات نے اسلحے کی خریداری ، الاخوان المسلمون کے ارکان کی تربیت ،ان کی دہشت گردی کے حملوں کے لیے تیاری اور افواہیں پھیلانے کے لیے رقوم مہیا کی تھیں ۔