صادق خان کے خلاف توہین آمیز ریمارکس پرکنزرویٹیو لیڈر کے خلاف کارروائی

صادق خان کو میئر بنانے والے اندھے تھے:اسٹیفن ارڈلی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

برطانوی اخبارات کی رپورٹس میں انکشاف کیا گیا ہے کہ برطانیہ کی قدامت پسند حکمراں جماعت کنزر ویٹیو پارٹی نے اپنے ایک سینیر رکن کے خلاف لندن کے پاکستانی نژاد مسلمان میئر صادق خان کے خلاف نازیبا الفاظ میں تبصرہ کرنے پر کارروائی شروع کی ہے۔

اخبار ’انڈیپنڈنٹ‘ نے ہفتے روز اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ جماعت کے ایک ترجمان کا کہنا ہے کہ اسٹیفن ارڈلی کے خلاف تحقیقات شروع کی گئی ہیں۔ان پر لندن کے میئر کے خلاف نا مناسب الفاظ کے استعمال کا الزام عاید کیا گیا ہے۔

رپورٹ کے مطابق ارڈلی پرالزام ہے کہ اس نے سماجی رابطوں کی ویب سائیٹ ’فیس بک‘ پر پوسٹ ایک بیان میں صادق خان کو لندن کا میئر منتخب کرنے پر شدید تنقید کی تھی اور کہا تھا کہ صادق خان کو میئر بنانے والے اندھے ہیں۔

اس بیان کے بعد کنزر ویٹیو پارٹی کے اندر سے اسٹٰیفن ارڈلی کے خلاف کارروائی کے لیے سخت دباؤ تھا اور ان کے الفاظ کو جماعت میں اسلام فوبیا کے شکار عناصرکے بیان کے طورپر لیا گیا تھا۔

گذشتہ جمعرات کو برطانیہ کی سپریم اسلامک کونسل نے بھی کنزرویٹیو پارٹی سے جماعت کی صفوں میں اسلام فوبیا کی شکار کالی بھیڑوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ کیا تھا۔

کونسل کی طرف سے برطانوی وزیراعظم اور کنزر ویٹیو پارٹی کی سربراہ تھریسا مے سے ایک کھلے مکتوب میں اسٹیفن ارڈلی کے خلاف آزادانہ تحقیقات کا مطالبہ کیا گیا اور ملک میں اسلام فوبیا کے تیزی کےساتھ پھیلنے اور مسلمانوں کے خلاف نسلی امتیازپر مبنی رویے کے خاتمے پر زوردیا گیا۔

خیال رہے کہ برطانیہ میں مسلمان آبادی 41 لاکھ سے زیادہ ہے اور لندن میں مسلمانوں کی سب سے بڑی تعداد آباد ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں