الحدیدہ میں حوثیوں کے سرپرست املاک اونے پونے بیچنے لگے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے ساحلی شہر الحدیدہ میں جہاں حکومتی فورسز اور باغیوں کےدرمیان گھمسان کی لڑائی جاری ہے وہیں دوسری جانب اپنی شکست کے واضح آثار دیکھ کر حوثیوں کے سرپرست اپنی جائیدادیں فروخت کرنے لگے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق الحدیدہ شہر میں مقامی شہریوں نے تصدیق کی ہے کہ حوثی ملیشیا کے سرکردہ عہدیدار، ان کے سرپرست اور شہر میں بڑی بڑی جائیدادوں کے مالک بھی اپنی جائیدادیں دوسرے شہریوں کو فروخت کرکے وہاں سے فرار ہونے کی کوشش کررہے ہیں۔

رپورٹ کےمطابق شہر میں کئی مقامات پر حوثی باغیوں اور ان کے حامیوں نے اپنی بیسیوں جائیدادیں جن میں اراضی، مکانات اور پلازے شامل ہیں پہلے ہی فروخت کردیے تھے۔

مقامی شہریوں کا کہنا ہے کہ چند ہفتے قبل ہی حوثیوں نے شکست کے آثار دیکھ لیے تھے اور وہ ممکنہ شکست کے خطرے کے پیش نظر اپنی جائیدایں فروخت کرنے لگے تھے۔ کئی حوثیوں نے اپنی جائیدادیں اور املاک مروجہ قیمت سے انتہائی کم نرخوں پر فروخت کیں۔ جیسے جیسے الحدیدہ میں لڑائی شدت اختیار کرتی گئی باغیوں اور ان کے حامیوں نے شہر میں موجود اپنی املاک فروخت کرنا شروع کردی تھیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں