.

لبنان : سعد حریری نے نئی حکومت کی جلد تشکیل کا اشارہ دے دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنان میں وزارت عظمی کے لیے نامزد سعد حریری نے جمعے کے روز کہا کہ وہ نئی حکومت تشکیل دینے کے قریب ہیں اور اس سلسلے میں ملک کی مرکزی سیاسی جماعتوں کے ساتھ مزید بات چیت کریں گے۔

غیر ملکی عطیہ کنندگان کا کہنا ہے کہ لبنان کو جہاں مئی میں پارلیمانی انتخابات منعقد ہوئے تھے جلد ایک حکومت کی تشکیل کی ضرورت ہے تا کہ اعتماد کو برقرار رکھا جا سکے اور معیشت کو سہارا دینے کے واسطے اصلاحات پر کام شروع کیا جا سکے۔

وزیر مالیات علی حسن خلیل نے رواں ہفتے خبردار کیا تھا کہ لبنان میں نئی کابینہ کی تشکیل کے حوالے سے مطلوبہ اور سنجیدہ پیش رفت سامنے نہیں آ رہی ہے۔

سعد حریری نے لبنان کے صدر میشیل عورن کے ساتھ اجلاس کے بعد کہا کہ "ہم تشکیل کی حالیہ مساوات کے حوالے سے بہت قریب آ گئے ہیں۔ البتہ کچھ مشاورت باقی ہے تا کہ ہر سیاسی فریق یہ بتا دے کہ وہ حکومت میں کتنی نمائندگی چاہتا ہے۔ ان شاء اللہ ہم حتمی تشکیل تک پہنچنے والے ہیں"۔

حریری نے اتحادی حکومت تشکیل دینے کے حوالے سے ارکان پارلیمنٹ کے ساتھ ملاقاتیں کیں۔ اس دوران وزارتی قلم دانوں سے متعلق بعض اختلافات سامنے آئے۔ توقع ہے کہ نئی حکومت بھی سابقہ حکومت کی طرح سیاسی کوٹے کے نظام کے تحت تمام لبنانی فرقوں اور گروپوں کی نمائندگی کرے گی۔

اس سے قبل سعد حریری جرمن چانسلر اینگلا میرکل کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرنس کے دوران یہ کہہ چکے ہیں کہ لبنان مطلوبہ اصلاحات کے نفاذ کے حوالے سے اپنے ارادے پر کاربند ہے۔