حوثی باغی غیر مشروط طور پرالحدیدہ کا قبضہ چھوڑ دیں:قرقاش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات کے وزیرمملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے کہا ہے کہ ان کا ملک یمن کے ساحلی شہر الحدیدہ سے ایران نواز حوثی باغیوں کے غیر مشروط انخلاء کا پرزور حامی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ الحدیدہ میں خون خرابہ روکنے کے لیے سفارتی ذریعےسے باغیوں کو قبضہ چھوڑنے پر مجبور کیا جاسکتا ہے۔

’العربیہ‘ کے مطابق ٹوئٹر پو پوسٹ متعدد ٹویٹس میں انور قرقاش نے کہا کہ حوثیوں کے اسلحہ اور ان کے ماہر نشانہ بازوں کے بارے میں سامنے آنے والی خطرناک رپورٹس کے بعد باغیوں سے غیر مشروط طوپر شہر سے نکل جانے کے مطالبے کا جواز اور بھی بڑھ جاتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ عرب اتحاد یمن میں جاری آپریشن میں تحمل اور ضبط نفس سے کام لے رہا ہے تاکہ شہریوں کا کم سے کم جانی نقصان ہو۔

ادھر ایک دوسری پیش رفت میں توقع ہے کہ یمن کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی مارٹن گریویتھ کل سوموار کو لکسمبرگ میں یورپی وزراء خارجہ کے اجلاس میں یمن کے حوالے سے ہونے والی سفارتی مساعی کی رپورٹ پیش کریں گے۔

العربیہ کے ذرائع کے مطابق لکسمبرگ میں ہونے والے یورپی وزراء خارجہ کے اجلاس میں پیش کی جانے والی رپورٹ الحدیدہ میں جاری آپریشن کی تفصیلات بیان کی جائیں گی۔ اس کے ساتھ ساتھ یورپی وزراء خارجہ الحدیدہ میں لڑائی بند کرکے مذکراکات کے ذریعے تنازع حل کرنے پر زور دیں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں