.

قطر نے ہرطرح سے حوثی باغیوں کی مدد کی:یمنی عہدیدار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی وزارت اطلاعات کے مشیر اور یمن کی میڈیا ایسوسی ایشن کے صدر فہد الشرفی نے الزام عاید کیا ہے کہ خلیجی ریاست قطر نے ایران نواز حوثی باغیوں کی ہرطرح سے مدد کی ہے۔

فہد الشرفی نے ان خیالات کا اظہار ’العربیہ‘ کو دیے گئے ایک انٹرویو میں کیا۔ انہوں نے کہا کہا کہ ایران کی طرح قطر نے بھی حوثی باغیوں کو ابلاغی، سیاسی اور عسکری میدانوں میں سپورٹ کیا۔ قطر کا یمن کے حوالے سے منفی کردار سامنے آچکا ہے اور قطر اب یمن کے حوالے سے بے نقاب ہوگیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ یمن کے حوالے سے قطر کے’الجزیرۃ‘ ٹی وی چینل کا گھیٹا کردار ہے۔

ایک دوسرے سوال کے جواب میں الشرفی نے کہا کہ قطر کی خیانت بلکہ زیادہ صحیح بات یہ ہے کہ قطری امیر، حمدین تنظیم کی جانب سے بھائی چارے، روابط، دین اور قرابت داری کی تمام رویات کو پامال کیا گیا۔ قطر کی جانب سے یمن کے باغیوں کی حمایت کوئی نئی بات نہیں۔ دوحہ نے ہمیشہ خطے میں ایرانی حمایت یافتہ عناصر اور گروپوں کی طرف داری کی۔ سنہ2007ء میں جب یمن میں حوثی اپنی بقاء کی جنگ لڑ رہے تھے اور ان کے وجود کو خطرہ تھا تو قطر نے کھل کرانہیں بچانے کے لیے کردار ادا کیا حالانکہ یمن کی باغیوں کے خلاف چوتھی لڑائی میں یمنی فوج کے ہاتھوں حوثی باغی اپنے انجام کو پہنچنے والے تھے مگر اس وقت کے مصری صدر [مقتول] علی عبداللہ صالح نے قطر کی ثالثی قبول کرکے حوثیوں کے خلاف جاری لڑائی روک دی تھی۔