.

یمن میں انسانی اور امدادی کارروائیوں کی انجام دہی پر کاربند ہیں : عرب اتحاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات نے باور کرایا ہے کہ یمن میں سعودی عرب کے زیر قیادت سرگرم عرب اتحاد یمنی عوام کے لیے بالخصوص الحدیدہ صوبے میں انسانی منصوبوں اور امدادی کارروائیوں کو انجام دینے پر کاربند ہے۔

سلامتی کونسل کو ارسال کیے گئے خط میں امارات نے حوثی ملیشیا پر الزام عائد کیا کہ وہ انسانی معاملے کو سودے بازی کے کارڈ کے طور پر استعمال کر رہی ہے۔ مزید برآں باغی عناصر بارودی سرنگیں بچھا کر اور امدادی سامان کے پہنچنے کو روک کر الحدیدہ میں انسانی صورت حال کو انتہائی سنگین بنا رہے ہیں۔

امارات کے مطابق عرب اتحاد نے الحدیدہ میں تین مرکزی ہسپتال اور 19 طبی مراکز قائم کیے ہیں جن کو طبّی امداد بھی فراہم کی گئی ہے۔ اس کے علاوہ الحدیدہ کی بندرگاہ کے لیے تعمیری سامان اور لوجسٹک خدمات بھی پیش کی جا رہی ہیں تا کہ حوثیوں کی جانب سے پہنچنے والے کسی بھی نقصان کی درستی کی جا سکے۔

امارات نے عالمی برادی سے مطالبہ کیا کہ یمنی عوام کے خلاف حوثیوں کے جرائم کی شدید مذمت کی جائے۔ امارات نے یمن کے لیے اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی مارٹن گریفتھ کے واسطے عرب اتحاد کی سپورٹ کی یقین دہانی بھی کرائی۔

خط میں بتایا گیا کہ حوثیوں کی جانب سے سعودی عرب پر داغے گئے بیلسٹک میزائلوں کی تعداد 150 تک پہنچ گئی ہے۔