.

حادثے میں زخمی عمر رسیدہ سعودی نے موت سے قبل ذمّے دار شخص کو معاف کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے شہر اَبہا میں ایک عمر رسیدہ شخص نے انسانیت اور اعلی اخلاق پر مبنی موقف کا مظاہرہ کرتے ہوئے ٹریفک حادثے میں وفات پانے سے قبل ذمّے دار شخص کو معاف کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق یہ واقعہ مملکت کے جنوب مغرب میں ضلع "رجال المع" میں پیش آیا۔ ٹریفک حادثے میں شدید زخمی ہو جانے والے شیخ علی آل صالح کو جب ہسپتال منتقل کیا جا رہا تھا تو انہوں نے اپنے ساتھیوں کو انتہائی عاجزی کے ساتھ وصیت کی کہ حادثے کے ذمے دار شخص کو کسی قسم کی سرزنش نہ کی جائے اور اُن کی اس وصیت پر عمل کیا جائے۔

شیخ علی آل صالح کے جنازے میں لوگوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔ سعودی عرب کے صوبے عسیر کے لوگوں نے سوشل میڈیا پر شیخ علی کی ذاتی زندگی پر روشنی ڈالی جو اپنی حیات میں ایثار اور بھلائی کے جذبے کے سبب جانے جاتے تھے۔ یہاں تک کہ وہ حاتم طائی کی نسبت سے "المع کے حاتم" کی عرفیت سے مشہور ہو گئے۔

شیخ علی آل صالح کے عزیز و اقارب کے مطابق وہ اپنی زندگی کے آخری لمحات میں بھی سخاوت کا پیکر رہے۔

سعودی ادیب علی مغاوی اور شاعر ابراہیم طالع الالمعی نے سوشل میڈیا پر اپنے تبصروں میں شیخ علی کی شخصیت کو خراج تحسین پیش کیا۔

علاوہ ازیں شیخ کی زندگی اور اخلاقِ حمیدہ کے تذکرے نثر اور شاعری کی صورت میں بھی سامنے آئے ہیں۔