.

حرض اور صعدہ میں یمنی فوج نے باغیوں کی سپلائی لائن کاٹ دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی سرکاری فوج نے عرب اتحادی فوج کی معاونت سے ’حجۃ‘ گورنری کے جبل الشبکۃ سےباغیوں کو نکال باہر کرنے کے بعد حرض، حجۃ اور صعدہ گورنریوں میں باغیوں کی سپلائی لائن کاٹ دی ہے۔

’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کے مطابق یمن کی ایلیٹ فورس کے بریگیڈ نے حرض کی گھاٹیوں اور جنوبی پہاڑے سلسلے میں پھیلے جبل ابو النار میں جبل الشبکہ کو باغیوں سے آزاد کرالیا۔ جبل الشبکہ سے باغیوں کی اہم تزویراتی سپلائن لائن بند کردی گئی ہے۔

یمنی فوج کے بریگیڈیئر محمد الحجوری نے ’العربیہ‘ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ ہفتے کے روز گھمسان کی لڑائی کےبعد سرکاری فوج نے حرض اور صعدہ کے درمیان باغیوں کی سپلائی لائن کا کنٹرول حاصل کرنے میں کامیاب ہوگئی۔ ان کا کہنا تھا کہ لڑائی میں دسیوں حوثی باغی ہلاک اور فرار ہوگئے ہیں۔

ادھر ایک دوسری پیشر رفت میں یمن کی سرکاری فوج نے شمالی شہر باقم میں عرب اتحادی فوج کی معاونت سے کی گئی کارروائی میں مزید اہم علاقے باغیوں سے چھڑا لیے۔

یمن کے بریگیڈ 63 کے آپریشنل چیف کرنل ادیب الحاج نے بتایا کہ ہفتے کو التباب البیض، جبال الکوز اور مغرب میں ابواب الحدید جیسے متعدد اہم مقامات پر سرکاری فوج نے اپنا کںٹرول مضبوط کرلیا۔