جزیرہ سیناء میں ’داعش‘ کا خطرناک کمانڈر فوجی کارروائی میں ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

مصر کے جزیرہ نما سیناء کے قبائلی ذریعے نے انکشاف کیا ہے کہ فوج نے ایک چھاپہ مار کارروائی کے دوران شدت پسند گروپ ’داعش‘ کے خطرناک کمانڈر ابو جعفر المقدسی کو ہلاک کردیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مقتول کمانڈر المقدسی الشیخ زوید میں ’داعش‘ کا سربراہ تھا اور اسے فوج کافی عرصے سے تلاش کررہی تھی۔

ذرائع کے مطابق فوج نے انٹیلی جنس معلومات کی بنیاد پر فلسطینی نژاد داعشی کمانڈر محمد ابو جزر المعروف ابو جعفر المقدسی کے مبینہ ٹھکانے کا گھیراؤ کیا اور اسے گرفتار کرنے کی کوشش مگر اس نے فوج پر فائرنگ کردی۔ جوابی فائرنگ میں وہ خود مارا گیا۔ مصری فوج کے مطابق ابو جعفر المقدسی کا شمار جزیرہ سیناء میں داعش کے انتہائی خطرناک کمانڈروں میں ہوتا تھا۔

داعش نے اپنے ’ٹیلی گرام‘ چینل پر الشیخ زوید شہر کے سربراہ کی ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔

خیال رہے کہ مصری فوج کئی سال سے جزیرہ سیناء میں داعشی شدت پسندوں کے خلاف نبرد آزما ہے۔ رواں سال فروری میں فوج نے جزیرہ سیناء میں داعش کے خلاف فیصلہ کن آپریشن کا آغاز کیا تھا جس میں سیکڑوں دہشت گردوں کو ہلاک یا گرفتار کیا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں