دھمکیاں مُسترد، امریکی ہوش کے ناخُن لیں: ایران

امریکا خدائی کا دعویٰ کرنے والی شہنشاہتوں کے انجام کو نہ بھولے:جواد ظریف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

ایرانی وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے امریکی حکام کی طرف سے بار بار سنگین نتائج کی دھمکیوں کومسترد کرتے ہوئے امریکیوں کوہوش کےناخن لینے کامشورہ دیا ہے۔

’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کے مطابق اپنے ایک ’ٹوئٹر‘ بیان میں محمد جواد ظریف نے لکھا کہ ’ایران کے لیے کوئی نئی پریشانی والی بات نہیں۔ ہم نے ہزاروں برسوں پر مشتمل شہشاہتیں گرتی دیکھیں۔ ایک شہنشاہیت ہمارے دور کی ہے جو ایک نہیں بلکہ کئی ملکوں میں پھیلی ہوئی ہے۔ اسے بھی اپنے بدتر انجام سے محتاط رہنا چاہیے کیونکہ زمین پر خدائی کا دعویٰ کرنے والے بڑے بڑے طاقت ور بھی عبرت نام انجام سے دوچار ہوئے‘۔ ان کا اشارہ واضح طورپر امریکا کی جانب تھا۔

قبل ازیں امریکی صدر نے ٹوئٹرپر ایک بیان میں ایرانی صدر کو سنگین نتائج کی دھمکی دی تھی اور کہا تھا کہ اگر تم نے امریکا کو دوبارہ دھمکی دی تو اس کے سنگین نتائج برآمد ہوں گے۔ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیوبھی درمیان میں کود پڑے اور کہا کہ ایران کو دھمکیوں پر ایسا عبرت ناک سبق سکھائیں گے جس کا تاریخ میں تصور نہیں کیا جا سکتا۔

ٹرمپ نے صدر روحانی کو مخاطب کرتے ہوئے لکھا کہ ہم دوبارہ ایران کی طرف سے دھمکیاں برداشت نہیں کریں گے۔ ذہنی افلاس کے عکاس الفاظ، تشدد، موت اور جرائم پر کوئی نرمی نہیں برتی جائے گی۔

خیال رہے کہ ایران اور امریکا کے درمیان کشیدگی میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ہے۔ قبل ازیں ایرانی صدر حسن روحانی نے امریکا کی پالیسی کو شدید تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اقدامات کی شدید مذمت کی تھی۔ ان کا کہنا تھا کہ امریکا کی حکمت عملی میں ایران کو ٹکڑے کرنا اور ایرانی نظام کا سقوط شامل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں