.

حوثی ملیشیا نے بدعنوانی اور لُوٹ مار کے الزام میں اپنی قیادت کے تعاقب سے روک دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں باغی حوثی ملیشیا کی نام نہاد سیاسی کونسل کے سربراہ مہدی المشاط نے چند روز قبل اپنی جماعت کے ایک رہ نما اور نگرانی اور احتساب کے مرکزی ادارے کے سربراہ علی العماد سے مطالبہ کیا کہ وہ بدعنوانی اور اداروں کی لُوٹ مار کے الزام میں حوثی جماعت کے کسی بھی رہ نما کے خلاف سرزنش کی کارروائی نہ کریں۔ المشاط نے ایسے کسی بھی اقدام کو سنگین غلطی قرار دیتے ہوئے کہا کہ ایسا سوچا بھی نہیں جانا چاہیے۔

المشاط نے زور دیا کہ حوثیوں کی جانب سے حکومتی تختہ الٹنے جانے سے قبل کے ادوار میں دیگر سیاسی جماعتوں کی قیادت سے متعلق بدعنوانی کے کیسوں کی تحقیقات کی جائیں اور انہیں استغاثہ اور عدالت کے سامنے پیش کیا جائے۔

المشاط نے خبردار کیا کہ کسی بھی حوثی رہ نما کو قصور وار ٹھہرانے کی کوشش حوثیوں کے سرغنے عبدالملک الحوثی کی ذاتی اہانت شمار کی جائے گی۔