.

اسرائیل کے ساتھ "جنگ بندی" کے حوالے سے حماس کی مشاورت اختتام پذیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

غزہ میں فلسطینی تنظیم حماس نے اسرائیل کے ساتھ فائر بندی اور فتح تریک کے ساتھ مصالحت کے حوالے سے اپنی مشاورت مکمل کر لی ہے۔

حماس کے سیاسی دفتر کے سربراہ اسماعیل ہنیہ کا کہنا ہے کہ مصر کو حماس کے فیصلوں سے آگاہ کرنے کے لیے تنظیم کے رہ نماؤں کا ایک وفد قاہرہ روانہ ہو گا۔

دوسری جانب غزہ پٹی اور اس کے اطراف فائر بندی کی کوششوں کو زیر بحث لانے کے لیے اسرائیلی سکیورٹی امور کی کابینہ کا اجلاس جمعرات کے روز ایک بار پھر ہو گا۔ کابینہ نے دو روز قبل بھی اس موضوع پر بات چیت کی تاہم کوئی فیصلہ سامنے نہیں آیا۔

فلسطینی وزارت صحت نے منگل کے روز ایک اعلان میں بتایا تھا کہ غزہ پٹی کے شمال میں بیت لاہیا میں اسرائیلی توپ خانے کی گولہ باری کے نتیجے میں حماس کے عسکری ونگ القسّام بریگیڈز کے دو ارکان جاں بحق ہو گئے۔

القسّام بریگیڈز کی جانب سے جاری بیان میں بتایا گیا ہے کہ اسرائیلی فوج نے بیت لاہیا میں بریگیڈز کے ٹھکانے عسقلان کو نشانہ بنایا۔ بریگیڈز کے دونوں ارکان دوران تربیت جاں بحق ہوئے۔

اسی طرح اسرائیلی فوج نے بھی اسی واقعے کے متعلق بیان میں تصدیق کی ہے کہ غزہ پٹی کے شمال میں حماس کے زیر انتظام ایک ٹھکانے سے اسرائیلی فوجیوں کو نشانہ بنایا گیا جس کے بعد قابض فوج نے فائرنگ کر کے جواب دیا۔