.

مصر : کالعدم اخوان المسلمون کے مرشد ِ عام محمد بدیع کو ایک مرتبہ پھر سزائے عمر قید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کی ایک عدالت نے کالعدم اخوان المسلمون کے مرشد عام محمد بدیع سمیت پانچ افراد کو تشدد کے واقعات میں ملوث ہونے کے الزامات میں عمر قید کی سزا کا حکم دیا ہے۔

محمد بدیع کو اس سے قبل بھی متعدد مرتبہ عمر قید کی سزا سنائی جا چکی ہے۔انھیں 2013ء میں اخوان المسلمون کے صدر ڈاکٹر محمد مرسی کی برطرفی اور ان کی حکومت کے خاتمے کے بعد گرفتار کیا گیا تھا۔ انھیں تشدد سے متعلق واقعات پر سزائے موت بھی سنائی جا چکی ہے۔

ان پر لوگوں کو تشدد پر اکسانے اور ریاست کے خلاف حملوں کی منصوبہ بندی کے الزامات میں فرد جرم عاید کی گئی تھی۔

قاہرہ کی فوجداری عدالت نے اتوار کو چار اور افراد کو بھی تشدد کے واقعات میں ملوث ہونے کے الزامات میں قصور وار قرار دے کر دس سے پندرہ سال تک قید کی سزا سنائی ہے۔ان پر 2013ء میں سات افراد کی ہلاکت کے الزام میں مقدمہ چلایا گیا ہے۔وہ عدالت کے اس فیصلے کے خلاف اپیل دائر کرسکتے ہیں۔