.

عمررسیدہ حاجن کو جوتے پیش کرنے والے سپاہی کو گورنر مکہ کا خراج تحسین

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

حج کے موقع پر سعودی عرب کے تمام اداروں اور حج کے امورمیں معانت کرنے والے رضاکاروں کی طرف سے دنیا بھر سے آنے والے اللہ کے مہمانوں کی خدمت کے لازوال واقعات دیکھنے کو ملتے ہیں۔

ایک ایسا ہی واقعہ حال ہی میں اس وقت میڈیا کی سرخیوں کی زینت بنا جب ایک پولیس اہلکارنے اپنے جوتے ایک عمر رسیدہ حاجن کو دے کرانسانی ہمدردی اور حجاج کرام کی خدمت کے جذبے کا عملی اظہار کیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سوشل میڈیا پر ایک فوٹیج وائرل ہوئی جس میں ایک پولیس اہلکارکو اپنے جوتے ایک عمر رسیدہ حاجن کو دیتے دیکھا جا سکتا ہے۔

اس انسان دوست جذبے سے متاثر ہوئے بغیر کون رہ سکتا ہے۔ مکہ معظمہ کے گورنر اور خادم الحرمین الشریفین کے مشیر خاص شہزادہ خالد الفیصل نے اپنے جوتے عمر رسیدہ خاتون حاجن کو دینے پر پولیس اہلکار کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ ’مسجد حرام میں اپنے جوتے مدد کے طورپر ایک معمر حاجن کو دینے والے سیکیورٹی اہلکار، اس کے خاندان اور اس کی پرورش اور رہ نمائی کرنے والے معاشرے کو ھدیہ تبریک پیش کرتا ہوں‘

فوٹیج کے سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد ٹوئٹر پربھی سعودی سپاہی کے جذبے کو غیرمعمولی طورپر سراہا گیا ہے۔ سوشل میڈیا کارکنوں نے سعودی سپاہی کو ’پیکر اخلاق سپاہی‘ قرار دیا ہے۔

مزدلفہ میں ایک پریس کانفرنس سے خطاب میں شہزادہ الفیصل کا کہنا تھا کہ سیکیورٹی اہلکار نے اپنے عمل سے ضیوف الرحمان کی حقیقی معنوں میں خدمت کا ثبوت پیش کیا ہے۔ دین اسلام ہمیں ایسے ہی اخلاق حسنہ کی تعلیم دیتا ہے۔ یہ اس کے اسلام کے عظیم الشام پیام اور اپنی اعلی تربیت کا عملی نمونہ ہے۔