.

خطے میں امریکی فوج سے پنجہ آزمائی کا کوئی ارادہ نہیں: روحانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ایران کے صدرحسن روحانی نے کہا ہے کہ تہران اس وقت تک جوہری سمجھوتے پرقائم رہے گا جب تک اس سمجھوتے کے ساتھ ایران کا مفاد وابستہ ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ خطے میں موجود امریکی فوج کےساتھ لڑائی کا کوئی اراردہ نہیں۔

ایرانی صدر نے توقع ظاہر کی کہ آخر کار امریکا کو ایران کے ساتھ طے پائے معاہدے سے نکلنے کی غلطی کا احساس ہوگا اور واشنگٹن ایک بار پھر اس معاہدے کا حصہ بنے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ اقوام متحدہ میں رواں ہفتے ہونے والی بات چیت صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو تنہا کرنے کی کوششوں کا واضح ثبوت ہے۔

صدر روحانی کا کہنا تھا کہ امریکا عن قریب واپس آئے گا۔ موجودہ صورت حال زیادہ دیر تک چلنے والی نہیں۔