.

یمن فوج کے حملوں میں تعزمیں حوثی باغیوں کا بھاری جانی نقصان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی سرکاری فوج نے ’تعز‘ گورنری کے مشرقی علاقے الصلو میں ایران نواز حوثی باغیوں کے خلاف کارروائیوں میں باغیوں کو بھاری جانی اور مالی نقصان سے دوچار کیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نے میدان جنگ سے اپنے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ یمن کی سرکاری فوج نے زیریں نقیل الصلو میں باغیوں کے ٹھکانوں پر تابڑ توڑ حملے کیے جس کے نتیجے میں باغیوں کو بھاری جانی اور مالی نقصان پہنچایا گیا۔ لڑائی میں کئی باغی ہلاک اور زخمی ہوئے جب کہ اسلحہ اور گولہ بارود کی بھاری مقدار بھی تباہ کر دی گئی۔

ذرائع کے مطابق تعز کے مشرقی محاذ پر حوثی باغیوں اور سرکاری فوج کے درمیان گھمسان کی لڑائی کی اطلاعات ہیں۔ فوجی ذرائع کا کہنا ہے کہ جھڑپیں اس وقت شروع ہوئیں جب حوثیوں نے التشریفات کیمپ کی طرف بڑھنے اور وادی الصالہ میں ری پبلیکن محل پر قبضے کی کوشش کی تھی۔

سرکاری فوج نے باغیوں کی پیش قدمی ناکام بناتے ہوئے انہیں بھاری جانی اور مالی نقصان سے دوچار کیا جس کے باعث باغی فرار پر مجبور ہو گئے۔

ادھر یمنی فوج نے صعدہ گورنری کے اطراف میں علب کے مقام پر حوثیوں کی بچھائی 400 بارودی سرنگیں تلف کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔