سعودی شہر جازان میں حوثیوں کی دہشت گردی کی سازش ناکام

عرب اتحادی فوج نے حوثیوں کی دو بمبار کشتیاں تباہ کردیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن میں آئینی حکومت کی رِٹ بحال کرنے میں سرگرم عرب اتحادی فوج نے حوثی باغیوں کی بارود سے بھری دو کشتیاں تباہ کردیں۔ عرب اتحادی فوج کے ترجمان کے مطابق حوثیوں کی بارود سے بھری کشتیوں کو اس وقت تباہ کیا گیا جب وہ سعودی عرب کے سرحد شہر جازان پرحملے کے لیے تیار کی گئی تھیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطابق عرب اتحادی فوج کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے بتایا کہ سمندر میں نگرانی کے دوران حوثیوں کی دو مشکوک کشتیوں کو دیکھا گیا۔ ان دونوں کشیتوں پر بم نصب کیے گئے تھے اور انہیں سعودی عرب کے سرحدی شہر جازان پرحملوں کے لیے استعمال کیا جانا تھا تاہم فوج نے فوری کارروائی کرکے ایک کشتی کو مقامی وقت کے مطابق صبح 4:50 اور دوسری کو 5:05 پر تباہ کردیا گیا۔ اس کے نتیجےمیں سعودی عرب کی جنگی کشتیوں کو معمولی نقصان پہنچا ہے۔

کرنل المالکی نے کہا کہ حوثیوں کی طرف سے دہشت گردی کی ہرسازش کو وقوع پذیر ہونے سے قبل ہی ناکام بنا دیا جائے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ حوثی دہشت گرد نہ صرف یمن بلکہ سعود عرب کے پرامن اور عام شہریوں کی زندگیوں سے بھی کھیل رہے ہیں۔ مگر انہیں ان کے جرائم میں کامیاب ہونے کا موقع نہیں دیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں