.

خاشقجی کی گمشدگی کا ڈرامہ سعودیہ کوبدنام کرنے کے لیے رچایا گیا: ولید بخاری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنان میں سعودی عرب کے قائم مقام سفیر ولید بخاری نے ترکی میں سینیر صحافی جمال خاشقجی کی پراسرار گم شدگی کو غیرملکی انٹیلی جنس اداروں کی منظم چال اور سعودی عرب کو بدنام کرنے کی سازش قرار دیا ہے۔

"ٹوئٹر" پرپوسٹ ایک بیان میں ولید بخاری نے کہا کہ جمال خاشقجی کے ترکی میں لاپتا ہونے کو سوشل میڈیا کے فورمز پر غیرمعمولی پذیرائی دی گئی۔ یہ محض ایک ڈرامہ ہے جس کےپیچھے انٹیلی جنس اداروں کی چالیں اور سعودی عرب کی شہرت کو داغ دار کرنے کی مکروہ کوشش ہے۔

ٹوئٹر پر بہت سے صارفین نے خاشقجی کی گم شدگی کو ایک سازش سے تعبیر کیا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ خاشقجی کے قتل کے بارے میں بیان دینے والے اخوان المسلمون کی فکر کے لوگ ہیں جو سعودی عرب کو بدنام کرنا چاہتےہیں۔

خیال رہے کہ سعودی عرب سے تعلق رکھنے والے صحافی اور کالم نگار جمال خاشقجی گذشتہ منگل کو استنبول میں سعودی قونصل خانے میں‌جانے کے بعد سے غائب ہیں۔ ترک حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ انہیں قونصل خانے میں بلا کر قتل کردیا گیا ہے تاہم سعودی عرب نے اس دعوے کی تصدیق یا تردید نہیں کی۔