یمنی وزیر اعظم برطرف، غفلت برتنے پر تحقیقات شروع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے صدرعبد ربہ منصور ھادی نے وزیراعظم احمد عبید بن دغر کو حکومتی ذمہ داریوں کی انجام دہی میں غفلت برتنے کے الزامات کےبعد ان کےعہدے سے ہٹا دیا ہے اور ساتھ ہی ان الزامات کی تحقیقات شروع کردی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق صدر ھادی نے معین عبدالمک کو نیا وزیراعظم مقرر کیا ہے۔ صدرکی طرف سے کابینہ میں مزید تبدیلیاں بھی کی گئی ہیں۔ سالم احمد سعید الخنبشی ک نائب وزیراعظم مقرر کیا گیا جب کہ دیگر وزراء کو اپنے عہدوں پر کام جاری رکھنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

یمن کی سرکاری خبر رساں ایجنسی "سبا" کے مطابق احمد عبید بن دغیر کو حالیہ عرصے کے دوران اقتصادی شعبے، عوامی خدمات، المھرہ میں سیلاب سےنمٹنے میں ناکای، امن وامان اور ملکی استحکام کے حوالے سے لاپرواہی برتنے کے الزام میں‌ہٹایا گیا ہے۔

المھرہ گورنری تباہ کن سیلاب کی وجہ سے آفت زدہ علاقہ قرار دیا گیا ہے۔ سیلاب کی وجہ سے شہریوں کی املاک کے ساتھ ساتھ بڑی مقدار میں سرکاری املاک کو بھی نقصان پہنچا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں