مصرکا جزیرہ نما سیناء میں 80 لاکھ لاگوں کو بسانے کا منصوبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

مصرکی حکومت نے جزیرہ نما سیناء میں 80 لاکھ افراد کو بسانے کا منصوبہ تیار کیا ہے۔ حکومت کا کہنا ہے کہ اس منصوبے کامقصد مصر کے گنجان آباد شہروں میں آبادی کے بڑھتے بوجھ کو کم کرنا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مصر کے وزیراعظم ڈاکٹر مصطفیٰ مدبولی نے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے معاون ڈاکٹر مراد وھبہ سے ملاقات کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ حکومت جزیرہ نما سیناء میں 8 ملین لوگوں کو آباد کرنے کے منصوبے پر کام کررہی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ جزیزہ نما سیناء میں آباد کاری کے اس وسیع پروجیکٹ کے روزگار کے وسیع مواقع پیدا ہوں گے، مقامی اور عالمی کمپنیوں کو سرمایہ کاری کا موقع ملے گا۔ ان کا کہنا تھا کہ جزیرہ نما سیناء میں 80 لاکھ شہریوں کو آباد کرنے کا منصوبہ دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکنے کے جاری منصوبے کا حصہ ہے۔اس منصوبے کو علاقائی اداروں اورتنظیموں کی بھی حمایت حاصل ہے۔

خیال رہے کہ مصری حکومت نے جزیرہ نما سیناء میں رواں سال کے دوران دہشت گردوں کے خلاف شروع کیا گیا آپریشن مکمل کرنے کا اعلان کیا ہے۔ حکومت کا کہنا ہے کہ جزیرہ نما سیناء میں آباد کاری کے ذریعے اس علاقے کو دہشت گردوں کی پناہ گاہ بننے سے روکنے میں مدد دی جائے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں