.

لبنان اخبار کی سعودی عرب کے خلاف شرانگیز مہم کی عدالتی تحقیقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنان کے ایک موقر اخبار کی جانب سے ایک منظم پالیسی کے تحت سعودی عرب کی کردار کشی، مملکت کی بدنامی اور حکومت کے خلاف شرانگیز مہم چلانے پر لبنان میں عدالتی تحقیقات کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ دوسری جانب لبنان کے صحافتی حلقوں نے بھی اخبار کی جانب سے سعودی عرب کے خلاف منفی پروپیگںڈہ کرنے کی شدید مذمت کی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق لبنان کے مرکزی پریس کلب کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیاہے کہ ریاست کے کسی بھی اخبار، جریدے یا اشاعتی ونشریاتی ادارے کو آئین اور قانون کی عمل داری کو یقینی بنائیں اور پیشہ وارانہ اصولوں کی خلاف ورزی سے گریز کریں۔بیان میں کہا گیاہے کہ مقامی جریدے "الدیار" نے سعودی عرب کے حوالے سے ناقابل قبول انداز اختیار کرتے ہوئے سعودی قیادت کی کردار کشی کی ہے۔ اخبار کی انتظامیہ کو اپنی پیشہ وارانہ غیر ذمہ کا اعتراف کرنا چاہیے۔

درایں اثناء لبنانی کی ایک اپیل عدالت کے جج سمیر حمود نے پراسیکیوٹر جنرل عماد قبلان کو واقعے کی تحقیقات کا حکم دیا ہے۔

خیال رہے کہ جریدہ الدیار میں شائع ہونے والے ایک مضمون میں سعودی عرب کی قیادت کے خلاف غیرمہذبانہ انداز اختیار کیا گیا تھا۔ اس جریدے میں اس سے قبل بھی سعودی عرب کے خلاف خبریں اور مضامین شائع ہوتے رہتے ہیں۔