.

الحدیدہ میں گھمسان کی لڑائی ، حوثی کمانڈر سمیت 15 باغی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے شہر الحدیدہ کے مشرق میں "کیلو 16" کے علاقے میں یمنی فوج کے ساتھ شدید جھڑپوں کے دوران حوثی ملیشیا کا ایک کمانڈر عبداللہ المحطوری اپنے 14 ساتھیوں سمیت مارا گیا۔

یمنی فوج نے مشرقی سمت سے الحدیدہ شہر میں اپنی پیش قدمی جاری رکھی ہوئی ہے۔ اس دوران باغیوں کو جانی اور مادی نقصان پہنچانے کے بعد حوثی ملیشیا کے متعدد ٹھکانوں پر کنٹرول حاصل کر لیا گیا۔

اس سے قبل یمنی فوج نے ایک اعلان میں بتایا تھا کہ حوثی ملیشیا کے ساتھ گھمسان کی لڑائی کے بعد الحدیدہ شہر کے مشرق میں "شارع 50" کا کنٹرول واپس لے لیا گیا ہے۔

یمنی فوج کے العمالقہ بریگیڈز کے میڈیا سینٹر کے مطابق سرکاری فورسز کا کنٹرول "يمن موبائل" کمپنی کی چورنگی تک پھیل گیا ہے اور یہ علاقہ الحدیدہ شہر کی شہ رگ شمار ہوتا ہے۔

میڈیا سینٹر نے مزید بتایا کہ العمالقہ بریگیڈز الحدیدہ شہر کے جنوبی داخلی راستے پر باغی ملیشیا کے ساتھ گھمسان کی لڑائی میں مصروف ہے۔ اس دوران بریگیڈز کو عرب اتحاد کی فورسز کی معاونت بھی حاصل ہے۔