صنعاء سے زخمی مسقط منتقل، حوثیوں کا وفد آج سویڈن روانہ ہو گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اقوام متحدہ کے خصوصی طیارے کے ذریعے یمن کے دارالحکومت صنعاء سے‌زخمی ہونے والے حوثی باغیوں کو خلیجی ریاست اومان منتقل کردیا گیا ہے جس کے بعد حوثی باغیوں کے پاس سویڈن میں امن مذاکرات سے فرار کا کوئی راستہ نہیں بچا ہے۔ توقع ہےکہ آج منگل کو حوثیوں کا وفد سویڈن روانہ ہوگیا، جہاں اقوام متحدہ کی زیرنگرانی یمنی حکومت اور حوثیوں میں مذاکرات کی کوشش کی جا رہی ہے۔

کویت کے نائب وزیر خارجہ خالد خالد جاراللہ نے بتایا کہ حوثیوں کا وفد منگل کو خصوصی طیارے کے ذریعے مقامی وقت کے مطابق صبح ساڑھے نو بجے سویڈن کے لیے روانہ ہوگا۔

کویتی وزیر نے کہا کہ سویڈن میں ہونے والے مذاکرات میں اہم بریک تھرو کا امکان ہے اور یمن کے دونوں متحارب فریق جنگ بندی کی مخلصانہ کوششیں کررہے ہیں۔

خیال رہے کہ حوثی باغیوں‌نے یمنی حکومت کے ساتھ بات چیت کی بحالی کے لیے صنعاء سے اپنے 50 زخمیوں کو علاج کے لیے بیرون ملک لے جانے کا مطالبہ کیا تھا۔ ان کا یہ مطالبہ پورا کردیا گیا ہے اور زخمیوں کو مسقط بھیج دیا گیا ہے۔

صنعاء کے ایک سفارتی ذریعے نے بتایا کہ زخمیوں کی منتقلی کے سلسلے میں ٹال مٹول کا مظاہرہ کرتے رہے ہیں۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ اقوام متحدہ کے سفارت کاروں نے زخمیوں کی مسقط منتقلی میں حوثیوں کی ہرممکن مدد کی مگر باغیوں کی جانب سے دانستہ طورپر ٹال مٹول کیا جاتا رہا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ اقوام متحدہ کے یمن کے لیے خصوصی ایلچی مارٹن گریفیتھ چند گھنٹے قبل صنعاء کے ہوائی اڈے پرپہنچے تھے۔ ان کی نگرانی میں حوثی زخمیوں کو صنعاء سے باہر لے جایا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں