سعودی عرب : قصیم صوبے کے پہاڑوں کے بیچ دلوں کو چُھو لینے والے ارغوانی پھول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے صوبے قصیم میں موسم سرما کی بارشوں کے بعد چٹانوں کے ماحول میں وسیع پیمانے پر نمو پانے والے "بنفشہ" کے ارغوانی رنگ کے پھولوں کا جمال اپنے عروج پر ہے۔

قصیم صوبے کے مغربی حصے میں پہاڑوں کے بیچ ان پھولوں کے خوب صورت مناظر کو کیمرہ مین محمد البہلال نے اپنے کیمرے کی آنکھ کے ذریعے محفوظ کیا ہے۔

البہلال نے العربیہ ڈاٹ نیٹ سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ بنفشہ کے پودے کی لمبائی 10 سے 50 سینٹی میٹر تک ہوتی ہے۔ اس کے پھولوں کا رنگ عموما ارغوانی اور سفید ہوتا ہے جب کہ بعض نادر صورت میں یہ زرد رنگ کے بھی ہوتے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ جس مقام پر یہ تصاویر لی گئیں وہ جبلِ شہباء میں واقع ہے۔

محمد البہلال کو بچپن سے ہی بارشوں، بادلوں، اور پانی کے ریلوں کی تصاویر لینے کا بے پناہ شوق ہے۔ وہ اکثر و بیشتر سفر کے ذریعے قدرتی مقامات ، جغرافیائی ٹھکانوں کے علاوہ آتش فشانوں کی بھی تصاویر بناتے ہیں۔

البہلال کا کہنا ہے کہ "مجھے قدرت کی صناعی کے مبہوت کر دینے والے مناظر کو کیمرے کی آنکھ میں محفوظ کرنے کا جنون کی حد تک شوق ہے۔ میں نے زلفی کے نزدیک صحراء کے سحر انگیز منظر کو ڈرون ٹکنالوجی اور مختلف عدسوں کے ذریعے عکس بند کیا۔ صحرائی جمال کی پرچھائی کی حامل اس تصویر کو سوشل میڈیا پر بھرپور پذیرائی حاصل ہوئی"۔

البہلال کی دیگر مشہور تصاویر میں مدینہ منورہ کے شمال میں خیبر کے علاقے میں واقع پہاڑوں کے آتش فشانوں کی تصاویر شامل ہے۔ ان پہاڑوں کی چوٹی تقریبا 2200 میٹر بلند ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں