مصر کی نجویٰ غراب 75 سال کی عمر میں بھی پیراکی کی چیمیئن!

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

مصرسے تعلق رکھنے والی پیراکی کی شوقین ایک خاتون نے 14 سال کی عمر میں پیراکی شروع کی اور اب اس کی عمر 75 سال ہے۔ معمر ہونے کے باوجود وہ آج بھی جسمانی چستی اور فٹنس کی بدولت پیراکی کے عالمی مقابلوں میں میڈل حاصل کررہی ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ نےاس بہادرمصری پیراک کا احوال اور تصاویر شائع کی ہیں جن سے اس کے پیراکی کے شوق کا اندازہ لگایاجاسکتا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ سے بات کرتے ہوئے 75 سالہ پیراک نجویٰ غراب نے کہا کہ عزم، ارادہ اور چیلنج قبول کرنے کا حوصلہ میرا اثاثہ ہے۔ میں پیراکی سے عشق کرتی ہوں اور یہ میرا اس وقت سےپسندیدہ مشغلہ ہے جب میری عمر 14 سال تھی۔ پیراکی کے عالمی مقابلوں اور اولمپک کھیلوں میں مصر کی نمائندگی کرنا میرا خواب تھا۔ میں نے 18 سال کی عمر میں باقاعدہ طورپر پیراکی کو ایک پیشے کے طورپر اختیار کیا تاہم بعد ازاں تعلیم جاری رکھنے اور ملازمت کے لیے مجھے اپنے اس شوق کو کچھ عرصہ کے لیے چھوڑنا پڑا تھا۔

نجویٰ سے جب اس کی جسمانی صحت کے بارے میں پوچھا گیا تو اس نے کہا کہ میں روزانہ دوگھنٹے پیراکی کرتی ہوں۔ آرٹ کالج سے تعلیم مکمل کرنے کے بعد میں‌نے فرانسیسی لٹریچر کی معملہ کی ملازمت اخیتار کی۔ 1970ء سے 2003ء میں اپنی ریٹائرمنٹ تک میں‌نے اس پیشے کو اپنائے رکھا۔ اس دوران میں پپراکی کی تربیت بھی حاصل کرتی رہی۔

ریٹائرمنٹ کے بعد نجویٰ‌نے اپنی ایک سہیلی کے ساتھ مل کر پیراکی کے شوق کو دوبارہ زندہ کیا اور سویڈن میں پیراکی کے ہونے والے عالمی مقابلوں میں حصہ لینے کی ٹھانی۔ سنہ 2010ء میں سویڈن میں ہونے والے اس مقابلے میں نجویٰ نے حصہ لیا اور 11 ویں پوزیشن حاصل کی۔ ساٹھ سال سے زاید عمر کو پہنچنے کے بعد نجویٰ کا یہ پہلا عالمی مقابلہ تھا تاہم اس نے مشق کا سلسلہ جاری رکھا۔

نجوی غراب

اس کے بعد نجویٰ نے نے پیراکی کے کئی دوسرے مقابلوں میں حصہ لیا۔ سنہ 2011ء میں فرانس میں پیراکی کے مقابلے میں دوسری پوزیشن حاصل کی۔ سنہ 2014ء میں کینیدا، 2015ء میں روس میں پیراکی کے مقابلوں میں تیسری پوزیشن حاصل کرکے 5 میڈل حاصل کیے۔ سنہ2016ء میں امریکا میں پیراکی کے مقابلوں میں دوسری پوزیشن لی اور 3 میڈل جیتے۔ جنوبی کوریا میں ہونے والے کھیلوں میں نجویٰ نے اپنی ریٹائرمنٹ کے بعد چھٹے پیراکی مقابلے میں حصہ لیا۔ اس کا کہنا ہے کہ میں نے پیراکی کے میدان میں مصر کا نام روشن کردیا ہے۔ معمر ہونے کے باوجود وہ مزید ایسے عالمی مقابلوں میں حصہ لینے کے لیے پرعزم ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں