.

ایرانی فوج شام سے ایسے انخلاء کرے گی: روس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

روسی نائب وزیر خارجہ میخائیل بوگڈانوف کا کہنا ہے کہ شام سرزمین کے ازسر نو متحد ہونے کے بعد ایرانی فوج اور ملیشیا شام سے نکل جائیں گی۔

امریکی خبر رساں ایجنسی ’’بلومبرگ‘‘ سے انٹرویو میں بوگڈانوف کا کہنا تھا کہ ایرانی فوج اور ملیشیا جس بہانے شام میں اپنا قیام جاری رکھے ہوئے ہیں، اس کے ختم ہوتے ہی ملک سے نکل جائیں گے۔ انھوں نے کہا کہ ’’شامی علاقوں کا ازسر نو متحد ہونا ایک ایسی حقیقت ہو گی کہ جس کے بعد ایرانی فوج اور ان کے حمایت یافتہ نیم فوجی دستوں کا شام میں قیام کا کوئی جواز باقی نہیں رہے گا۔‘‘

یاد رہے کہ امریکا کئی مرتبہ شام سے ایرانی فوج اور ملیشیا کے انخلاء کا مطالبہ دہرا چکا ہے۔

شام میں ایرانی فوج پر اسرائیل بھی اپنی ناراضی دکھا چکا ہے۔ تل ابیب بھی کئی مرتبہ بتا چکا ہے کہ وہ اپنی سیکیورٹی کے لئے خطرہ بننے والی ایرانی فورس کی شام میں موجودگی سے پہلو تہی نہیں برت سکتا۔ اسرائیل، شامی سرزمین پر متعدد فضائی حملے کر کے وہاں موجود ایرانی فوجیوں اور حزب اللہ کے ٹھکانوں کو نشانہ بنا چکا ہے۔