.

مصر: پولیس کے ساتھ جھڑپ میں 6 مشتبہ جنگجو ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں پولیس نے ہفتے کی صبح جنوبی گورنری سوہاج میں ایک جھڑپ میں چھے مشتبہ جنگجوؤں کو ہلاک کردیا ہے۔

مصر کی وزارت داخلہ نے ایک بیان میں کہا ہے کہ پولیس نے دارالحکومت قاہرہ سے 460 کلومیٹر جنوب میں واقع گورنر ی سوہاج میں مشتبہ جنگجوؤں کے پہاڑی علاقے میں ایک ٹھکانے پر چھاپا مار کارروائی کی تھی اور اس کے بعد جھڑپ میں چھے مشتبہ جنگجو مارے گئے ہیں۔

بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ پولیس نے مشتبہ جنگجوؤں کے ٹھکانے سے اسلحہ اور گولہ بارود بھی پکڑا ہے۔پولیس کی یہ کارروائی وزارت داخلہ کی مصر کی سلامتی اور استحکام کو نقصا ن پہنچانے والی دہشت گرد تنظیموں سے نمٹنے کے لیے کوششوں کے ضمن میں کی گئی ہے۔

مصری فوج نے فروری 2018ء میں ’’ سیناء 2018‘‘ کے نام سے شمالی صوبے سینا ء اور دوسرے علاقوں میں جنگجوؤں کے خلاف بڑی کارروائی شروع کی تھی۔اس میں اب تک سیکڑوں مشتبہ دہشت گرد ہلاک ہوچکے ہیں ۔

شورش زدہ شمالی سیناء میں داعش سمیت مختلف جنگجو گروپوں نے مصر کے پہلے منتخب صدر ڈاکٹر محمد مرسی کی جولائی 2013ء میں برطرفی کے بعد سے مسلح بغاوت برپا کررکھی ہے۔وہ دارالحکومت قاہرہ سمیت ملک کے دوسرے علاقوں میں بھی حملے کرتے رہتے ہیں۔ تاہم اب ان کی مسلح سرگرمیوں کی شدت میں کمی واقع ہوچکی ہے۔