.

جنوبی یمن میں اتحادی لڑاکا جہازوں کی بمباری، القاعدہ کے دسیوں جنگجو ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی آئینی حکومت کی رٹ بحالی میں مددگار عرب اتحاد میں شامل لڑاکا طیاروں اور ہیلی کاپٹروں نے یمن کی ابین گورنیٹ میں القاعدہ کے ٹھکانوں پر پیشگی فضائی حملے کئے ہیں۔ ان حملوں کی منصوبہ بندی انتہائی خفیہ رکھی گئی۔حملوں کا نشانہ بننے والے شدت پسندوں کے لئے یہ بمباری انتہائی ’حیران کن‘ تھی۔

’’العربیہ‘‘ ذرائع نے ان حملوں سے متعلق بتایا ہے کہ عرب اتحاد کے لڑاکا طیاروں نے یمن کی مودیہ ڈائریکٹوریٹ کے علاقے عومران میں انتہا پسند تنظیم القاعدہ کے کیمپ کو نشانہ بنایا۔

ذرائع کے مطابق حملوں میں عومران کے القاعدہ کیمپ میں تنظیم کی قیادت سمیت دسیوں جنگجووں کے مارے جانے کی اطلاع ہے۔ انہی ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ اپاچی ہیلی کاپٹروں اور لڑاکا طیاروں نے جنوبی یمن میں القاعدہ کے اہم ٹھکانوں کو نشانہ بنایا۔

یاد رہے القاعدہ نے حالیہ چند دنوں میں ان علاقوں میں سرگرمیاں دکھانا شروع کر دیں تھیں جنہیں یمن کی سرکاری فوج نے آزاد کرایا تھا۔ تاہم القاعدہ نے حوثیوں کے ساتھ مل کر واگذار کرائے گئے ان علاقوں کا سکون تہہ وبالا کرنا شروع کر رکھا تھا۔