جبل القہر : سعودی عرب کے جنوب مغرب میں صف بند انوکھے پہاڑ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے جنوب مغربی صوبے جازان کے ضلع الریث میں واقع "القہر" کے پہاڑ اپنی انوکھی صورت کے سبب مملکت میں امتیازی اہمیت کے حامل سمجھے جاتے ہیں۔ سُتون کی شکل کے ایک دوسرے سے متصل یہ پہاڑ تنگ وادیوں کے بیچ واقع ہیں جبکہ ان کے اطراف درختوں کے جنگل پھیلے ہوئے ہیں۔

سعودی فوٹوگرافر "حسن حريصی" نے ڈرون کیمرے کی مدد سے ان نا ہموار پہاڑوں تک پہنچ کر ان کے پُر ہیبت اور سحر انگیز مناظر کو محفوظ کر لیا۔ پرانے وقتوں میں یہ جبل زہوان کے نام سے جانا جاتا تھا۔

حسن حریصی کی بنائی گئی وڈیو سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کے بعد العربيہ ڈاٹ نیٹ نے سعودی فوٹوگرافر سے بات چیت کی۔ حریصی نے بتایا کہ ان پہاڑوں کی چوٹی تک چڑھنا جان جوکھوں کا کام ہے لہذا انہوں نے پہاڑوں کی پیچیدہ ہیئت کو محفوظ کرنے کے لیے فضائی عکس بندی کا سہارا لیا۔ حریصی کے مطابق مذکورہ علاقے میں پہنچنے پر وہ ان پہاڑوں کی قدرتی صف بندی دیکھ کر حیران رہ گئے جو ایک حسین منظر پیش کر رہے تھے۔

جبل القہر کے مشرق میں پہاڑوں اور وادیوں کا سلسلہ ہے جو اسے ظہران کے ضلع الفرشہ سے علاحدہ کرتا ہے جب کہ مغرب میں متعدد وادیاں ہیں۔ جبل القہر کے شمال میں وادی بیش پڑتی ہے جب کہ جنوب میں جبل الاسود واقع ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں