حوثی ملیشیائیں سویڈن معاہدہ ناکام بنانا چاہتی ہیں:الاریانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے وزیر اطلاعات معمر الاریانی نے الزام عاید کیا ہے کہ ایرانی حمایت یافتہ حوثی ملیشیائیں گذشتہ ماہ سویڈن کے دارالحکومت اسٹاک ہوم میں ہونے والے امن معاہدے کو ناکام بنانے کی سازش کررہی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ‌کے مطابق الاریانی "ٹوئٹر" پر پوسٹ کردہ ایک بیان میں کہا کہ حوثیوں کی طرف سے سیاسی، ابلاغی پروپیگنڈے کے ساتھ ساتھ یمن میں جنگ بندی معاہدے کی نگرانی کے لیے جنرل پیٹرک کامیرٹ کے قافلے پر حملہ کرکے سویڈن سمجھوتے کو ناکام بنانے کی کوشش کی۔ ان کا کہنا تھا کہ سمجھوتے میں یہ طے تھا کہ حوثی ملیشیا الحدیدہ شہر، بندرگاہ اور تین دیگربندرگاہوں سے نکل جائیں گی مگر اس کے باوجود حوثی ملیشیا اپنی جگہ موجود ہے۔

الاریانی نے کہا کہ حوثی ملیشیا کی منافقانہ پالیسی کھل کر سامنے آگئی ہے۔ حوثی باغی اقوام متحدہ کے جنگی بندی کی نگرانی کے قائم مشن کے کام میں بھی رکاوٹیں کھڑی کررہے ہیں۔ ان کے چال چلن اور دیگر جرائم کا صاف پتا چل گیا ہے۔ حوثیوں نے اپنی اسٹریٹجی واضح‌کردی ہے۔ وہ ہرصورت میں سویڈن معاہدے کو کامیاب بنانے کے بجائے ناکام بنانے پر تلےہوئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں