.

صعدہ کے جبل ردمان پر یمنی فوج کا کنٹرول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی سرکاری فوج نے پیر کے روز حوثی باغیوں کے گڑھ سمجھے جانے والے علاقے صعدہ میں تزویراتی اہمیت کے حامل پہاڑی علاقے 'جبل ردمان' کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے لیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق جبل ردمان باغی ملیشیا سے واپس لینے کے لیے گھمسان کی جنگ ہوئی جس میں باغیوں کو غیرمعمولی جانی اور مالی نقصان اٹھانا پڑا۔

یمنی فوج کے ایک ذریعے نے بتایا کہ 'بریگیڈ 63' اور بریگیڈ 9 کے سپاہیوں نے جبل ردمان اور باقام محاذ پر سپلائی لائن اپنا مکمل کنٹرول قائم کرلیا ہے۔

اسی گورنری میں یمن کی سرکاری فوج نے 'آل زماح' قصبات کے بقیہ علاقے بھی باغیوں سے چھین لیے ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ لڑائی میں حوثی باغیوں کو غیرمعمولی جانی اور مالی نقصان پہنچا ہے اور ان کی کئی فوجی گاڑیاں اور اسلحہ تباہ کردیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ سرکاری فوج کی مسلسل پیش قدمی کے نتیجے میں صعدہ میں حوثیوں کےگرد گھیرا تنگ کردیا گیا۔ یمنی فوج اور عرب اتحادی فوج نے'سانپ کا سرکچلنا' کے عنوان سے حوثی باغیوں کے گڑھ میں آپریشن جاری رکھا ہوا ہے۔ اس آپریشن میں‌حوثی باغیوں کو غیرمعمولی نقصان پہنچا ہے۔