تبوک کی برف پر سعودی منچلوں کی موج مستیاں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے شمالی صوبے تبوک میں موسم سرما کی برف باری نے سعودی نوجوانوں کو پہاڑی علاقوں میں برف پر پھسلنے Iskiing)) کا شوق پورا کرنے کا موقع فراہم کر دیا۔

نایف الحربی کو اسکینگ کے کھیل کا جنون ہے۔ انہوں نے جب اللوز کے پہاڑ پر برف کی سفید چادر دیکھی تو ان سے رہا نہ گیا۔ نایف کہتے ہیں کہ اسکینگ کا تفریحی مشغلہ صحت کے لیے بھی مفید ہے۔

ہانی السہلی اس کھیل کا تجربہ کرنے کے لیے خصوصی طور پر جدہ شہر سے آئے۔ انہوں نے بتایا کہ دو روز قبل سوشل میڈیا پر زیر گردش کئی وڈیو کلپ دیکھے جن میں اللوز کے پہاڑ پر برف باری نظر آئی۔ اس پر ہانی نے ان سحر انگیز مناظر سے لطف اندوز ہونے اور اسکینگ کے کھیل کا تجربہ کرنے کے لیے تبوک کا رخ کرنے کا فیصلہ کر لیا۔

دارالحکومت ریاض سے آنے والے منصور الرشیدی کہتے ہیں کہ وہ اسکینگ کے کھیل سے بہت خوف زدہ تھے۔ تاہم ساتھیوں کے اصرار اور حوصلہ افزای پر انہوں نے اس کھیل میں استعمال ہونے والے خصوصی جوتے پہن لیے اور برف پر پھسلنے کے تجربے سے لطف اندوز ہوئے۔

فہد البلوی تبوک میں ہی سکونت پذیر ہیں۔ وہ ہر سال اس جگہ آ کر اسکینگ کے کھیل اور خوب صورت مناظر سے دل بہلاتے ہیں۔ وہ کہتے ہیں کہ اللوز کے پہاڑ پر ہونے والی برف باری کے نتیجے میں بہت سے نوجوانوں کے اندر اسکینگ کے کھیل کو سیکھنے اور اسے لطف اندوز ہونے کا شوق پیدا ہوا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں