.

اسرائیلی وزیراعظم اور روسی صدر کے درمیان 27 فروری کو ملاقات طے

شام میں ایرانی مداخلت بات چیت کے ایجنڈے کا اہم موضوع ہو گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیلی وزیراعظم کے دفتر سے جاری ہونے والے ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو اور روسی صدر ولادی میر پوتین 27 فروری کو ملاقات کریں گے۔ اس ملاقات میں دیگر امور پر تبادلہ خیال کے ساتھ شام میں ایران کی موجودگی پر تفصیلی غور کیا جائے گا۔ بیان میں کہا گیا ہے کہ وزیراعظم یاھو صدر پوتین کو شام میں ایران اور حزب اللہ کی سرگرمیوں پر اپنی تشویش سے آگاہ کریں گے۔

خیال رہے کہ دونوں رہ نمائوں کو رواں ہفتے ملاقات کرنا تھی مگر نامعلوم وجوہات کی بناء پر یہ ملاقات منسوخ ہوگئی تھی۔ مبصرین کا کہنا ہے کہ نیتن یاھو انتخابی مہم اور مذہبی یہودیوں کی نمائندہ جماعتوں کے ساتھ اتحاد کی کوششوں میں مصروف تھے جس کی وجہ سے وہ پوتین سے ملاقات نہیں کرسکے۔

ادھر ماسکو حکومت نے بھی کہا ہے کہ صدر ولادی میر پوتین اور اسرائیلی وزیراعظم بنجمن نیتن یاھو مشرق وسطیٰ کے امورپربات چیت کے لیے آئندہ ہفتے اہم ملاقات کریں گے۔ تاہم انہوں نے اس کی مزید تفصیل بیان نہیں کی۔

یہ ملاقات ایک ایسے وقت میں ہو رہی ہے شام سے امریکی فوج کے انخلاء کی تیاریاں کی جا رہیں اور دوسری طرف اسرائیل نے شام میں ایران اور حزب اللہ کے خلاف اپنی کارروائیوں میں اضافہ کردیا ہے۔