.

حوثی ملیشیا کا الحدیدہ میں حکومتی ٹیم پر راکٹوں سے حملہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں‌حوثی باغیوں نے ساحلی شہر الحدیدہ میں حکومتی ٹیم اور شہر میں امن وامان کے قیام کے لیے سیکیورٹی فورسز کی تعیناتی کی رابطہ کار کمیٹی کے ارکان پر راکٹوں سے حملہ کردیا تاہم ٹیم اس حملے میں محفوظ رہی ہے۔

یمن کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے حکومتی ٹیم کے ایک مصدقہ ذریعہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ حوثی ملیشیا نے الحدیدہ کے لیے قائم کردہ حکومتی کمیٹی کے فیلڈ کمانڈروں کے اجلاس کو 'کاتیوشا' راکتوں سے نشانہ بنایا۔ یہ اجلاس الحدیدہ میں سرکاری فوج کی تعیناتی کے طریقہ کار پرغورکے لیے بلایا گیا تھا اور اس کے حوالے سے حوثی باغیوں، اقوام متحدہ کے امن مندوب مارٹن گریفیتھس اور یمن کی آئینی حکومت میں اتفاق رائے بھی ہوچکا ہے۔

ذرایع کا کہنا ہے کہ حوثی ملیشیا کی غیرذمہ دارانہ اور وحشیانہ کارروائیاں الحدیدہ میں جنگ بندی کے حوالے سے سویڈن کی میزبانی میں طے پائے معاہدے کے لیے خطرہ ہیں۔ حوثیوں کی طرف سے حکومتی ٹیم پر کاتیوشا راکٹوں کا استعمال اس بات کا ثبوت ہے کہ حوثی ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت الحدیدہ میں امن وامان کےقیام اور شہر کو آئینی حکومت کے حوالے کرنے کی کوششوں کو ناکام بنانا چاہتے ہیں۔