دہشت گردی کا کوئی دین اور نسل نہیں ہوتی: عادل الجبیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور عادل احمد الجبیر نے نیوزی لینڈ کے شہر کرائیسٹ چرچ میں گذشتہ جمعہ کو دو مساجد میں نمازیوں پر ہونے والے وحشیانہ حملے کی شدید مذمت کی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ نیوزی لینڈ میں دہشت گردی کے واقعے نےا یک بار پھر ثابت کیا ہے کہ دہشت گردوں کا کوئی دین اور نسل نہیں ہوتی۔ دہشت گرد چاہے وہ کسی بھی ملک میں یا کسی بھی مذہب اور نسل سے تعلق رکھتے ہوں‌وہ انسانیت کے دشمن ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ایک بیان میں عادل الجبیر نے کہا کہ نیوزی لینڈ دہشت گردی سے محفوظ ملک سمجھا جاتا تھا جس میں تمام مذاہب کے پیروکار بقائے باہمی کے اصول کے تحت زندگی بسر کررہےہیں۔ نیوزی لینڈ کی وزیراعظم، ان کی حکومت اور عوام نےمساجد میں دہشت گردی کے واقعے کے بعد جو اقدامات کیے ہیں وہ قابل تحسین ہیں۔

خیال رہے کہ گذشتہ جمعہ کو نیوز لینڈ کے شہر کرائیسٹ چرچ میں واقع دو مساجد میں ایک آسٹریلوی دہشت گرد نے حملہ کرکے 50 نمازی شہید کردیے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں