شام سے عراق کے حوالےکیے گئے 4 داعشی دہشت گردوں کو سزائے موت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق کی ایک عدالت نے شام میں گرفتاری کے بعد بغداد کے حوالے کیے گئے چار دہشت گردوں کو سزائے موت دینے کاحکم دیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطابق ان دہشت گردوں کو شام میں سیرین ڈیموکریٹک فورسزگرفتار کرنےکے بعد ان کے خلاف قانونی کارروائی کے لیے انہیں عراق کےحوالے کر دیاتھا۔ عراق کی عدالتوں میں ایسے 900 دہشت گردوں کے خلاف مقدمات چل رہےہیں۔ ان پر شدت پسند تنظیم'داعش' کےساتھ تعلق کا الزام عایدکیاجاتا ہے۔

عراق کی سپریم جوڈیشل کونسل کی طرف سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ الکرخ کی ایک فوجی داری عدالت نے داعش سےتعلق رکھنےوالے چار دہشت گردوں کو شام اور عراق میں بے گناہ شہریوں کے قتل امن وامان تباہ کرنے کے الزامات ثابت ہونےکےبعد انہیں سزائے موت سنائی ہے۔

خیال رہے کہ عراق کی عدالتوں کی طرف سے سزائے موت کے فیصلوں میں چار گنا اضافہ دیکھا گیا ہے۔ سال2017ء میں سزائے موت کے 65 فیصلے سنائےگئے اور 2018ء میں یہ تعداد 271 تک جا پہنچی تھی۔تاہم گذشتہ برس 52 سزائےموت کےقیدیوں کی سزا پرعمل درآمد کیا گیا جبکہ2017ء میں 125 دہشت گرودں کو تختہ دار پرلٹکایا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں