ڈرامہ سیریل "العاصوف" کے دوسرے حصے میں حرم مکی پر قبضے کی مکمل کہانی بیان ہو گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

رمضان مبارک میں "mbc" چینل پر سعودی ڈرامیہ سیریل "العاصوف" کا دوسرا حصہ نشر کیا جائے گا۔ اس دوسرے حصے میں "جہيمان" اور اس کی جماعت کی جانب سے 40 برس قبل مسجد حرام پر دھاوے اور قبضے کی مکمل کہانی پیش کی گئی ہے۔ یہ واقعہ 1979 میں پیش آیا تھا۔ العاصوف 2 کو عبدالحرمن الوابلی نے تحریر کیا ہے اور اس کے پروڈیوسر المثنی صبح ہیں۔ نمایاں اداکاروں میں ناصر القصبی، عبدالالہ السنانی، حبيب الحبيب، ليلى السلمان، افنان فؤاد اور ريم عبدالله شامل ہیں۔

سال تھا 1979 اور دن تھا 20 نومبر کا جب ایک شدت پسند سعودی جہیمان العتیبی نے 200 سے زیادہ ساتھیوں کے ساتھ مسجد حرام کے داخلی راستوں کا کنٹرول سنبھال لیا۔ ان افراد نے جنازوں کے اندر ہتھیار چھپا کر مسجد حرام کے اندر پہنچایا تھا۔ اس جماعت نے سیاسی محرکات کی بنیاد پر بظاہر مذہبی پروپیگنڈا کرتے ہوئے پورے حرم مکی پر قبضہ کر لیا جو کہ خوارج اور استبدادی عناصر کا وتیرہ رہا ہے۔

مسلح جماعت نے صرف حرم پر قبضے تک اکتفا نہیں کیا بلکہ اعلان کیا مہدی منتظر کی آمد کی شرائط پوری ہو چکی ہیں اور اس حوالے سے حجتیں بھی پیش کی گئیں۔ سعودی فوج نے حرم مکی کا محاصرہ کر لیا اور باغی قابضوں کے خلاف آپریشن عمل میں لایا گیا۔ اس طرح 15 روز بعد محاصرہ اختتام کو پہنچا۔ اس دوران بعض باغیوں مارے گئے اور دیگر کو قیدی بنا لیا گیا۔ بعد ازاں 21 صفر 1400 ہجری مطابق 9 جنوری 1980ء کو باغی جماعت کے 63 ارکان کو مملکت کے مختفل شہروں میں کھلے اور عوامی مقامات پر موت کے گھاٹ اتار دیا گیا۔ موت کی سزا پانے والوں میں جہیمان العتیبی سرفہرست تھا۔

اس سے قبل گزشتہ برس رمضان میں "العاصوف" ڈرامہ سیریل کا پہلا حصہ نشر کیا گیا تھا۔ اس حصے میں سعودی دارالحکومت ریاض میں گزشتہ پچاس برسوں کے دوران سامنے آنے والی سماجی فکر سے متعلق تبدیلیوں کی منظر کشی کی گئی تھی۔


مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں