.

عرب اتحاد نے یمنی پارلیمنٹ پر حوثیوں‌کا فضائی حملہ ناکام بنا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن میں آئینی حکومت کے حامی عرب اتحاد نے ایران نواز حوثی ملیشیا کی طرف سےیمنی پارلیمنٹ پر حملہ ناکام بنا دیا۔
العربیہ کے مطابق یمن میں آئینی حکومت کے حامی عرب اتحاد کے ترجمان کرنل ترکی المالکی نے بتایا کہ حوثی ملیشیا کی طرف سے حوثی ملیشیا کی طرف سے بغیر پائلٹ ڈرون طیاروں کی مدد سے یمنی پارلیمنٹ کو نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی مگر اسے کسی بھی حملے سے قبل بری طرح ناکام بنا دیا۔

الریاض میں ایک پریس کانفرنس نےدوران عرب اتحادی فوج کے ترجمان کا کہناتھا کہ صنعاء میں حوثیوں کے طیاروں کو مسلسل نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ حوثیوں‌نے صنعاء میں ایک آئل بردار ٹینکر خالی کرنے کی کوشش کی جس پر بمباری کرکے اسے تباہ کردیا گیا۔

کرنل المالکی نے خبر دارکیا کہ حوثیون کی طرف سے بحر الاحمر میں تیل بردار ٹینکر خالی کرنے کی اجازت نہ دینےسے تیل خفیہ طورپر دوسرے مقامات پرسپلائی کیاجا رہا ہے۔

ایک سوال کے جواب میں المالکی نے کہا کہ حوثیوں کی جانب سے صعدہ گورنری کے 100 خاندان زبردستی نکال دیے تھے جنہیں واپس کردیا گیا ہے۔

اس موقع پر اتحادی فوج کے ترجمان نے ارحب شہرمیں حوثیوں‌کے ہاتھوں شہریوں کے مکانات دھماکوں‌سے اڑائے جانے کی ایک ویڈیو بھی دکھائی۔

ان کہنا تھا کہ عرب اتحادی فوج اور یمن کی آئینی فوج مل کر حوثی ملیشیا کی میزائلوں کے حصول کی صلاحیت کو ختم کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ عرب اتحادی فوج فضائی حملوں میں حوثیوں کے میزائلوں اور بھاری ہتھیاروں کے ذخیروں کو نشانہ بنا رہی ہے جس کے نتیجے میں ایرانی حمایت یافتہ گروپ کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔