استنبول : قطر کے زیر انتظام شامی اپوزیشن ٹی وی چینل کا سربراہ برطرف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

قطر نے استنبول میں اپنے ٹی وی اسٹیشن Syria tv کے ڈائریکٹر کو برطرف کر دیا ہے۔ ایک روز قبل قطر نے اپنے "دوحہ سینٹر فار میڈیا فریڈم" کو بند کرنے کا بھی اعلان کیا تھا۔

اپوزیشن سے تعلق رکھنے والے ٹی وی اسٹیشن کے ڈائریکٹر انس ازرق نے اپنی برطرفی کی وجوہات کے بارے میں کوئی وضاحت نہیں کی۔ اسٹیشن کا آغاز مارچ 2018 میں ہوا تھا۔

ازرق نے اپنے مستعفی ہونے کے بیان میں قطری ذمے داران کو نظر انداز کر دیا۔ انہوں نے صرف اسرائیلی پارلیمنٹ کے سابق رکن عزمی بشارہ کو سراہنے پر اکتفا کیا اور منصوبے پر بشارہ کا شکریہ ادا کیا۔

فیس بک پر اپنی پوسٹ میں ازرق نے لکھا کہ "آج سیریا ٹی وی کے انتظامی امور سے میرے استعفے کو قبول کر لیا گیا ، وہ چینل جس کی تاسیس میں حصہ لینا میرے لیے ایک اعزاز ہے۔ میں اس منصوبے کے سرپرست عرب دانش ور ڈاکٹر عزمی بشارہ ، کمپنی کے چیف ایگزیکٹو اور ٹی وی اسٹیشن میں اپنے دوستوں کا ممنون اور مشکور ہوں"۔

مذکورہ ٹی وی اسٹیشن اپنے سیاسی منصوبے میں اعلان کردہ وعدے کے مطابق کامیابی کو یقینی نہ بنا سکا۔ اس حوالے سے اسٹیشن کے ایک کارکن نے جواز پیش کرتے ہوئے کہا کہ کامیابی کو جانچنے کے لیے "ایک برس کی عمر" ناکافی رہی۔

ایک دوسری رائے یہ بھی ہے کہ ٹی وی اسٹیشن کی عدم کامیابی کے پیچھے چینل سے تعلق رکھنے والے میڈیا پرسنز کے درمیان شدید اختلافاتکا ہاتھ ہے۔ چینل میں الاخوان کے ہمنوا کارکنوں کی تعداد میں اضافہ ہو گیا جن کو دمشق میں بشار حکومت سے ہمدردی رکھنے والی چینل انتظامیہ کے ساتھ اختلاف تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں