.

'2000' خُدام مسجد حرام کے صحن میں بارش کا پانی کیسے خشک کرتے ہیں؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مسجد حرام میں دیگرامور کی خدمت بجا لانے والوں کے ساتھ ساتھ بارش کے پانی کو خشک کرنےکے لیے بھی 2000 خدام پر مشتمل عملہ تعینات کیا گیا ہے جو ہنگامی بنیادوں پر مسجد کےصحن کو خشک کرنے میں مصروف عمل رہتا ہے۔ انہیں صفائی اور مسجد کے صحن کو بارش کے پانی کو ہٹانے اور اسے خشک کرنےکے لیے4135 مشینیں دی گئی ہیں۔

گذشتہ روز مکہ معظمہ میں ہونے والی بارش کے بعد مسجد حرام کے میں جمع ہونے والے پانی کوہٹانے اور فرش کو خشک کرکے لیے دو ہزار خادمین ہنگامی بنیادوں پر کام کرکے صحن کو خشک کیا۔

سعودی عرب کی سرکاری نیوز ایجنسی 'ایس پی اے' کے مطابق فیلڈ سروس ایڈمنسٹریشن نے مسجد حرام کے دیگر انتظامی اداروں کے ساتھ مل کر افرادی قوت اور مشینیوں کا استعمال کرتے ہوئے بارش کے پانی کو صاف کرنے کےہنگامی پلان پرعمل درآمد کیا۔ 'ایس پی اے' کے مطابق انتظامیہ نے بارش کی صورت میں مسجد حرام میں صفائی اور پانی خشک کرنے کا ہنگامی پلان تیار کیا ہے۔ صحن مطاف اور مسجد حرام کے صحن میں جمع ہونے والے پانی کو ہٹانے کے لیے عملےکو پانی خشک کرنےوالی مشینیں فراہم کی گئی ہیں۔ اس کےعلاوہ مسجد کے صحن میں زائرین کا رش کم کرنےکے لیے بھی انتظامیہ ہمہ وقت متحرک رہتی ہے۔

حرمین شریفین کی پریزی ڈنسی کمیٹی کی طرف سے ماہ صیام میں مسجد حرام میں بارش کی صورت میں صورت حال سے نمٹنے اور نمازیوں اور زائرین کا رش کنٹرول کرنے کے لیے ہنگامی پلان بنایا گیا ہے۔ ماہ صیام کی آمد سے قبل ہی زمانی اور مکانی حالات سےپیشہ وارانہ انداز میں نمٹنے کے لیے باصلاحیت اور پیشہ ور عملہ تعینات کیا جاتا ہے۔