.

کالی گھٹائوں اور درختوں میں تعاقب کرنے والے بادلوں نے اہل عسیر پر نیا سحر طاری کردیا

موسم میں خنکی نے سیاحوں کا رخ عسیر کی طرف موڑ دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب کے سرحدی پہاڑی علاقے عسیر میں گذشتہ روز ہونے والی بارش کے ساتھ ژالہ باری اورگھنے سیاہ بادلوں‌ نے ماحول یکسر بدل کررکھ دیا۔ بارش نے موسم ٹھنڈا کردیا جس کے نتیجے میں سیاحوں‌ کا رخ بھی عسیر کی طرف مڑ گیا۔ دوسری طرف ژالہ باری کے باعث عیسر کے پہاڑی اور میدانی علاقوں نے سفید چادر اوڑھ لی۔ فضاء میں بلند گھنے بادلوں اور کالی گھٹائوں کے دل موہ لینے والے مناظر نے قدرتی حسن کو مزید چار چار چاند لگا دیے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ‌ کے مطابق عسیر میں بارش اور ژالہ باری ہو تو ہرطرف سے شہری ان دل آویز مناظر کو اپنے کیمروں میں محفوظ کرلیتے ہیں۔ یہاں بھی ایک مقابلے کا ساماں ہے اور ہرایک دوسرے سے بڑھ کر زیادہ اچھوتے مناظر سوشل میڈیا پر پوسٹ کر رہا ہے۔ عسیر میں بارش اور ژالہ باری کیا ہوئی اس کے نتیجے میں بننے والے خوبصورت مناظر سے سوشل میڈیا پر بھی ایک نیا رنگ چھا گیا۔

KSA: clouds and pleasant weather

بادل پہاڑی چوٹیوں اور وادیوں سے ایسے گذر رہے ہیں جیسے ایک دوسرے کا تعاقب کر رہے ہیں۔ زمین پر سبزے کو نئی تازگی ملی۔ گندم، جو اور دوسری فصلوں‌ کو نئی زندگی مل گئی۔ عسیر کے علاقوں السودہ، بنی مالک اور بنی مازن میں بادلوں میں گھرے اور ژالہ باری کے بچھے سفید فرش کے بعض مناظر العربیہ ڈاٹ نیٹ‌ نے بھی اپنے قارئین کی نگاہوں کی تازگی کے لیے پیش کیے ہیں۔

KSA: clouds and pleasant weather

محکمہ موسمیات کے ماہر ڈاکٹر خالد الزعاق نے 'العربیہ ڈاٹ نیٹ' سے بات کرتے ہوئے کہا کہ سعودی عرب میں بارشیں دو طرح کی ہوتی ہیں۔ ایک موسم سرما کی بارشیں اور دوسری موسم گرماں کے آغاز میں۔ موسم سرما کی بارشیں جنوبی افریقی ممالک سے البحیرات کے پہاڑوں سے گذر کر سعودی عرب کے شمالی اور شمال مشرقی، مغربی اور وسطی علاقوں میں داخل ہوتی ہیں۔ موسم گرما‌ کی بارش جنوبی سعودی عرب کے علاقوں بالخصوص عسیر کے علاقوں میں برستی ہے۔

KSA: clouds and pleasant weather