.

پاکستانی وزیر اعظم عمران خان کا نریندر مودی کو ٹیلیفون

الیکشن میں کامیابی پر مبارکباد اور عوامی بہتری کیلئے کام کرنے کی خواہش: ترجمان دفترخارجہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے حالیہ انتخابات میں بھاری اکثریت سے کامیاب ہونے والے بی جے پی کے رہنما نریندر مودی کو ٹیلیفون کیا ہے اور الیکشن میں کامیابی پر مبارکباد دی ہے۔

نریندر مودی نے سابق وزیر اعظم نوازشریف کی طرح وزیراعظم عمران خان کو وزرات عظمی کے حلف کی تقریب میں مدعو کر لیا تو پاکستان کا کیا فیصلہ ہو گا۔ ٹی وی ٹاک شوز سیاسی وسفارتی حلقوں میں سوال اٹھنا شروع ہو گئے اور اس پر تجزیوں کا سلسلہ شروع ہو گیا۔

اتوار کو ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے نریندر مودی کو ٹیلیفون کیا ہے۔ ٹیلی فونک گفتگو میں وزیر اعظم نے نریندر مودی کو الیکشن میں کامیابی پر مبارک باد دی۔ دفتر خارجہ کے مطابق وزیراعظم نے ملکر دونوں ممالک کے عوام کی بہتری کیلئے کام کرنے کی خواہش کا اظہار کیا۔ اس کے علاوہ وزیر اعظم نے خطے کے امن اور استحکام کیلئے کام کرنے کا بھی اعادہ کیا۔

یاد رہے کہ نریندر مودی نے 2014ء میں پہلی بار بھارتی وزیراعظم بننے پر حلف برداری کی تقریب میں اس وقت کے وزیر اعظم نواز شریف کو مدعو کیا تھا اور نواز شریف اس میں شریک ہوئے تھے۔

سفارتی حلقوں میں سوال اٹھنا شروع ہو گئے ہیں اور تجزیوں کا سلسلہ جاری ہے کہ اگر نریندر مودی نے روایت کو برقراررکھتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کو حلف برداری کی تقریب میں مدعو کر لیا تو پاکستان کا فیصلہ کیا ہو گا؟ اس حوالے سے ابھی صورتحال واضح نہیں ہے۔