.

قدرتی گیس کے معاہدے کے حوالے سے مصر اور اسرائیل کے درمیان تصفیہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں تیل کی قومی کمپنی Egyptian General Petroleum اور ریاست کے زیر ملکیت Egyptian Natural Gas Holding Company نے اعلان کیا ہے کہ قدرتی گیس کے معاہدے کے حوالے سے تنازع کے حل کے لیے ان کے اور اسرائیل کی الیکٹرسٹی اتھارٹی کے درمیان 50 کروڑ ڈالر قیمت کا تصفیہ طے پا گیا ہے۔

تصفیے کی رقم ساڑھے آٹھ سال میں لوٹائی جائے گی۔ اس سلسلے میں سمجوتے کے نافذ العمل ہونے کی تاریخ پر 6 کروڑ ڈالر پیشگی ادا کیے جائیں گے۔ اس کے چھ ماہ بعد 4 کروڑ ڈالر کی رقم دی جائے گی۔ بقیہ رقم 2.5 کروڑ ڈالر کی 16 قسطوں کی صورت میں لوٹائی جائے گی۔

انٹرنیشنل چیمبر آف کامرس نے 2015 میں مصر کو حکم جاری کیا تھا کہ وہ اسرائیل کی بجلی کی کمپنی کو 1.8 ارب ڈالر بطور زر تلافی ادا کرے۔ فریقین کے درمیان گیس کی برآمد کا معاہدہ جزیرہ نما سیناء میں شدت پسندوں کی جانب سے سپلائی کی پائپ لائنوں پر حملوں کے سبب سبوتاژ ہو گیا تھا۔