.

مصر کے سابق صدر ڈاکٹر محمد مرسی قاہرہ کے قریب سپرد خاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے سابق صدر محمد مرسی کو منگل کے روز علی الصبح دارالحکومت قاہرہ میں سپرد خاک کر دیا گیا۔ اس موقع پر سابق صدر کے خاندان کے کئی افراد موجود تھے۔ استغاثہ نے حکم جاری کیا تھا کہ فورینزک کمیٹی کی جانب سے رپورٹ کی تیاری کے بعد ڈاکٹر مرسی کی تدفین کی جائے۔

محمد مرسی پیر کے روز اپنے خلاف مقدمے کی سماعت کے دوران دل کا دورہ پڑنے کے نتیجے میں خالق حقیقی سے جا ملے تھے۔ سیکورٹی خدشات کی بنا پر مرسی خاندان کی جانب ان کی آبائی گاؤں میں تدفین کی درخواست مسترد کر دی گئی تھی۔

مصری پراسیکیوٹر جنرل نبیل صادق کے مطابق محمد مرسی اور دیگر ملزمان عدالتی کارروائی کے دوران ساؤنڈ پروف پنجرے کے اندر موجود تھے۔ اس دوران مرسی اچانک بے ہوش ہو کر گر پڑے۔ انہیں فوری طور پر ہسپتال منتقل کیا گیا جہاں ان کے انتقال کی تصدیق کی گئی۔

مصری پراسیکیوٹر جنرل نے استغاثہ کے ارکان پر مشتمل ایک ٹیم کو میت کے معائنے، عدالت کے ہال میں نصب کیمروں کی ریکارڈنگ محفوظ کرنے اور جائے وقوع پر موجود عینی شاہدین کے بیانات قلم بند کرنے کے احکامات جاری کیے تھے۔