.

عراقی فوج نے داعش کے زیر استعمال میڈیا کوریج کے 142 آلات قبضے میں لے لیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کے انٹیلی جنس حکام نے دعویٰ کیا ہے کہ سیکیورٹی فورسز نے شدت پسند تنظیم 'داعش' کے ٹھکانوں سے بڑی تعداد میں ایسے آلات اور سرور سسٹم قبضے میں لیے ہیں جنہیں جنگ کے دوران میڈیا کوریج کے لیے استعمال کی جاتا تھا۔

عراقی انٹیلی جنس حکام کا کہنا ہے داعش کے زیر استعمال 142 سروس سسٹم قبضے میں لیے گئے ہیں جو موصل کی سڑکوں، تلعفر اور نینویٰ گورنری کے دوسرے علاقوں میں جنگ کی صورت حال میں میڈیا کوریج کے لیے استعمال کیے جاتے تھے۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ داعشی دہشت گرد ان آلات کو شہریوں میں خوف اور دہشت پھیلانےاور اپنے جرائم کی تشہیر کے لیے استعمال کرتے تھے۔

درایں اثناء عراقی وزیراعظم عادل عبدالمہدی نے ایک بیان میں کہا ہے کہ فوج نے شام کی سرحد سے متصل علاقوں میں 'داعش' کے خلاف ایک بڑے فوجی آپریشن کا آغاز کیا ہے تاکہ ان علاقوں‌ میں موجود دہشت گردوں کا صفایا کر کے ملک کو دہشت گردی کے خطرات سے بچایا جاسکے۔

عادل عبدالمہدی کا کہنا تھا کہ دہشت گردی کا خطرہ بدستور موجود ہے مگر انہوں‌ نے یہ عہد کیا ہے کہ وہ داعش کو دوبارہ عراق کو عدم استحکام سے دوچار کرنے کا موقع نہیں دیں گے۔