.

حجاج پر پابندی دوحا کی سب سے بڑی ناکامی ہے: انور قرقاش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے امور خارجہ ڈاکٹر انور قرقاش نے کہا ہے کہ قطری شہریوں کے لئے حج ادائی سے متعلق آسانیاں پیدا کرنے کی سعودی وزارت عمرہ وحج کی اپیل عاقلانہ فیصلہ ہے۔

اپنے ٹویٹر پیغام میں انور قرقاش کا کہنا تھا کہ عازمین حج کی راہ میں رکاوٹیں کھڑی کرنا دراصل قطر کی جانب سے اپنے بحران کے حل میں ناکامی پر دلالت کرتا ہے۔ قطر حج ایسے اہم دینی فریضے کو سیاست کی نظر کرنے سے گریز کرے۔ قطری عازمین حج پر پابندی کی منطق اور دلیل کمزور موقف کی عکاس ہیں۔

سعودی عرب کی حج اور عمرے کی وزارت نے قطر میں متعلقہ حکام پر زور دیا ہے کہ وہ فریضہ حج کی ادائی کے خواہش مند قطری شہریوں کی مملکت آمد کو آسان بنائے .. اور اس حوالے سے قطری حکومت کی جانب سے عائد رکاوٹوں کو ختم کرے۔

مملکت کی سرکاری خبر رساں ایجنسی SPA کے مطابق سعودی وزارت حج نے ہفتے کے روز جاری بیان میں باور کرایا کہ خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز کی حکومت قطر سے معتمرین اور عازمین حج کی آمد کو آسان بنانے کے لیے اسی طرح تمام تر وسائل بروئے کار لانے کی خواہش مند ہے جس طرح عموما پوری دنیا کے عازمین حج کے واسطے خواہش رکھتا ہے۔ رواں سال 1440 ہجری کے لیے دنیا بھر سے 17 لاکھ سے زیادہ عازمین حج کی آمد پر اتفاق ہوا ہے جب کہ اس سال کے دوران دنیا بھر سے 80 لاکھ کے قریب مسلمانوں نے عمرہ ادا کیا۔