.

سعودی خاتون آرٹسٹ نے مناسک حج کو وال پینٹنگز کی شکل دے دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی خاتون آرٹسٹ عواطف عبدالعزیز المالکی نے مناسک حج کو خوب صورت انداز سے اپنی وال پینٹنگز میں سمویا ہے۔ اس حوالے سے انہوں نے طواف ، وقوف عرفات اور رمی جمرات کو جدت طرازی کے ساتھ لوگوں کے سامنے پیش کیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ سے گفتگو کرتے ہوئے عواطف نے بتایا کہ "میں نے یہ پسند کیا کہ نماز اور طواف کی عبادت، حرمین شریفین، روضہ مبارک اور مقامات مقدسہ کو اس طرح فن پاروں میں مجسم کیا جائے کہ وہ ہر جگہ ہمارے سامنے رہیں۔ کسی بھی مسلمان کے لیے یہ خوب صورت ترین منظر ہے۔ میں نے اپنی پینٹنگز کے ذریعے وقوف عرفات، رمی جمرات اوور دیگر مناسک حج کو نمایاں کیا ہے"۔

سعودی آرٹسٹ نے واضح کیا کہ وہ مختلف پیمائش کی وال پینٹگز تیار کرتی ہیں جو 14 میٹر تک پہنچ جاتی ہیں۔

عواطف کا کہنا ہے کہ انہوں نے پینٹنگ بنانے کا آغاز 25 برس پہلے کیا جب وہ پرائمری اسکول میں زیر تعلیم تھیں۔ بعد ازاں یونیورسٹی سے فارغ التحصیل ہو کر ٹیچر بننے کے بعد پینٹنگ کے شوق کی تصویر پایہ تکمیل تک پہنچی۔

باصلاحیت سعودی آرٹسٹ کے مطابق انہوں نے آرٹ کے حوالے سے مختلف نوعیت کے کام انجام دیے۔ ان میں آرٹ اسکولز میں سرگرمیاں اور کرداروں اور گھوڑوں کی تصاویر شامل ہیں۔ عواطف کا کام اس لحاظ سے بھی منفرد ہے کہ انہوں نے گذشتہ برس فن پاروں کی نمائش میں بڑے شعراء کے قصیدوں کو پینٹنگ میں ڈھال کر پیش کیا۔ انہوں نے مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ کی بہت سی پینٹنگز بنائیں۔ عواطف نے مملکت میں اور اس کے بیرون بہت سے ایونٹس میں شرکت کی۔