.

مدینہ منورہ ایئرپورٹ پر محکمہ پاسپورٹ کی 87 خواتین اہل کار مصروف عمل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مدینہ منورہ کے پرنس محمد بن عبدالعزیز انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر محکمہ پاسپورٹ کی خواتین اہل کار عازمین حج کی خدمت کے سلسلے میں بھرپور کوششوں میں مصروف ہیں۔ یہ خواتین اہل کار مدینہ منورہ کے ایئرپورٹ کے راستے 6 لاکھ سے زیادہ عازمین حج کے مملکت میں داخلے کے عمل کو آسان بنانے میں اپنا کردار ادا کر رہی ہیں۔

ایئرپورٹ کے مختلف ہالوں میں 87 خواتین اہل کار موجود ہوتی ہیں جو چوبیس گھنٹے شفٹوں میں اپنی ذمے داریاں انجام دے رہی ہوتی ہیں۔ ان میں عازمین حج کا مختلف زبانوں میں استقبال کرنے والی اہل کار بھی شامل ہیں۔

اس حوالے سے خاتون اہل کار سپاہی روی الرحیلی نے بتایا کہ وہ ایئرپوٹ کے ہال میں کاؤنٹرز کے ذریعے پہلی مرتبہ عازمین حج کی خدمت کے سلسلے میں کام کر رہی ہیں ... اور وہ اپنے اس کام میں بڑا شرف اور عظیم اجر پاتی ہیں۔

ایک اور اہل کار سارہ الفریدی کہتی ہیں کہ ان کو اور ان کی ساتھی اہل کاروں کو کئی کورسز کے ذریعے تربیت دی گئی جس نے حج کی ادائیگی کے لیے آنے والوں کی خدمت انجام دینے کے حوالے سے مہارت پیدا کرنے میں کلیدی کردار ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ آنے والے عازمین حج کی آنکھوں میں خوشی نظر آتی ہے . یہ لوگ ہمارے لیے تعریفی کلمات ادا کرتے ہیں اور ہماری طرف سے پیش کی جانے والی تمام خدمات پر اظہار تشکر کرتے ہیں۔

اس سلسلے میں ایک خاتون اہل کار ہدیل یاسین کا کہنا ہے کہ ہم عازمین حج کی معاونت اور انہیں تیز تر خدمت پیش کرنے کے لیے کوشاں رہتے ہیں تا کہ ہال کے اندر رش اور بھیڑ کے بغیر یہ لوگ سکون سے اپنی منزل تک پہنچ جائیں۔

مدینہ منورہ کے پرنس محمد بن عبدالعزیز انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر حج فورس کے سربراہ میجر جنرل فواز قالط نے باور کرایا کہ اس ہوئی اڈے پر عازمین حج کے داخلے کے اقدامات مکمل کرنے اور تیز تر سروس پیش کرنے کے حوالے سے محکمہ پاسپورٹ کی خواتین کا کردار اہمیت کا حامل ہے۔

قالط کے مطابق تمام 87 خواتین اہل کار تعلیمی اور عملی قابلیت کی حامل ہیں۔ انہوں نے تربیتی کورسز میں بھرپور طریقے سے شرکت کی جس کا مثبت اثر بیت اللہ کے مہمانوں کی خدمت کے حوالے سے نظر آ رہا ہے۔